Home » Interesting News » خود لذتی کی عادت نے 100 مردوں کی جان لے لی

خود لذتی کی عادت نے 100 مردوں کی جان لے لی

برلن(مانیٹرنگ ڈیسک) خودلذتی کی قبیح حرکت تو دنیا بھر میں پائی جاتی ہے لیکن جرمنی میں مرد اس کے ایسے خطرناک طریقے اپناتے ہیں کہ ایک تحقیقاتی سروے کے نتائج کے مطابق ہر سال وہاں 100مرد خودلذتی کی وجہ سے موت کے گھاٹ اتر جاتے ہیں۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ مرد جنسی تحریک کو مزید بھڑکانے کے لیے کوئی نہ کوئی ڈیوائس استعمال کرتے ہیں جو ان کی موت کا سبب بن جاتی ہے۔ کچھ ہفتے قبل ایک نوجوان کی لاش ملی تھی جس نے پیٹی ہوز، برساتی اور پیراکی کا لباس پہن رکھا تھا اور سرپر ایک پلاسٹک بیگ بھی چڑھا رکھا تھا۔ یہ تمام چیزیں پہن کر یہ شخص ہیٹر کے قریب بیٹھا اپنے جسم پر پنیر پگھلانے کی کوشش کر رہا تھا، اس سے یہ آکسیجن کی شدید کمی کا شکار ہو کر موت کے منہ میں چلا گیا۔
کچھ روز پہلے جرمنی کے شہر ہیلے میں ایک شخص کرسمس ٹری کے پاس مردہ حالت میں پایا گیا تھا اور ٹری کی لائٹس اس کے جسم سے لپٹی ہوئی تھیں، ڈاکٹروں کا کہنا تھا کہ یہ شخص اس طریقے سے اپنی جنسی خواہش کو بڑھانے کی کوشش کر رہا تھا لیکن بجلی لگنے سے مر گیا۔“ماہرین نے سروے کے نتائج میں ایسے ہی ایک اور شخص کی موت کا حوالہ دیا ہے جس کی لاش اس کے فلیٹ میں زنجیروں میں جکڑی ہوئی ملی تھی۔ ماہرین کا کہنا تھا کہ اس کے متعلق اندازہ یہی ہے کہ اس نے پرتشدد فحش فلموں سے متاثر ہو کر یہ حرکت کی اور اپنی شہوت کے ہاتھوں موت کے گھاٹ اتر گیا۔

 

#paksa

#paksa.co.za

Share this:

Comments

Check Also

نوجوان مسلمان میاں بیوی ایک سال کا سفر طے کرکے عمرہ کرنے مکہ پہنچ گئے، پیدل نہیں گئے بلکہ۔۔۔ ایسا طریقہ اپنایا کہ دنیا بھر کے مسلمان داد دینے پر مجبور ہوگئے

جدہ(مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا بھر سے لاکھوں لوگ ہر سال حج و عمرے کے لیے سعودی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *