Home » Interesting News » دنیا کے سب سے بڑے ملک میں جسم فروشی کرتی پکڑی جانے والی خاتون کو سب کے سامنے ایسی سزا دے دی گئی کہ دیکھ کر ہی انسان کانپ اُٹھے

دنیا کے سب سے بڑے ملک میں جسم فروشی کرتی پکڑی جانے والی خاتون کو سب کے سامنے ایسی سزا دے دی گئی کہ دیکھ کر ہی انسان کانپ اُٹھے

جکارتہ(مانیٹرنگ ڈیسک) انڈونیشیاء کے ایک صوبے میں شرعی قوانین نافذ ہیں جہاں مردوخواتین کا اختلاط ممنوع ہے۔ ایسے میں وہاں گزشتہ دنوں ایک جسم فروش خاتون پکڑی گئی جسے پولیس نے سرعام ایسی سزا دے ڈالی کہ دیکھ کر ہی انسان کانپ اٹھے۔ میل آن لائن کے مطابق انڈونیشیا کے صوبے آچے میں یہ خاتون ایک گھر میں نامحرم مرد کے ساتھ موجود تھی جسے رنگے ہاتھوں پکڑ لیا گیااور شہر کے ایک چوراہے میں لیجا کر کھلے عام 100کوڑے مارے گئے۔

سزا کے دوران خاتون درد سے بلبلاتی رہی اور آخر تک بے ہوش ہو کر گر گئی۔ رپورٹ کے مطابق انڈونیشیا میں یہ آخری خاتون ہو گی جسے سرعام یہ سزا دی گئی ہے۔ وہاں کھلے عام لوگوں کو ایسی سزائیں دینے پر عالمی سطح پر شدید تنقید کی جاتی ہے۔ چنانچہ اس تنقید سے بچنے کے لیے قانون سازوں نے اس سزا کے قانون میں ایک تبدیلی کر دی ہے جس کے تحت اب مجرموں کو بند کمروں میں سزا دی جائے گی

 

#paksa

#paksa.co.za

Check Also

#paksa #paksa.co.za چینی انجینئر رائیونڈ سے پسند کی لڑکی بیاہ کر لے گیا

لاہور، رائیونڈ (ویب ڈیسک) چینی انجینئر رائے ونڈ سے پسندکی لڑکی بیاہ لے گیا ،شادی …