Home » Interesting News » باپ نے اپنی بیٹی کی لاش سسرال والوں کے گھر کے سامنے رکھ کر جلادی، یہ کام کس چیز کے احتجاج میں کیا؟ جان کر آپ کی بھی آنکھیں نم ہوجائیں گی

باپ نے اپنی بیٹی کی لاش سسرال والوں کے گھر کے سامنے رکھ کر جلادی، یہ کام کس چیز کے احتجاج میں کیا؟ جان کر آپ کی بھی آنکھیں نم ہوجائیں گی

baiti

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں سسرالیوں نے اپنی بہو کو اسقاط حمل پر مجبور کیا جس سے اس کی موت واقع ہو گئی۔ بیٹی کی المناک موت پر اس کے باپ نے ایک ایسا کام کر دیا کہ پورے بھارت میں ہنگامہ کھڑا ہو گیا۔ دی مرر کی رپورٹ کے مطابق ریاست مہاراشٹر کے ضلع سنگالی کے ایک چھوٹے سے گاﺅں مہیسل میں سواتی نامی اس لڑکی کے ہاں دو بیٹیاں پیدا ہوئیں۔جب وہ تیسری بار امید سے ہوئی تو سسرالیوں نے اس کا الٹراساﺅنڈ کروایا جس میں معلوم ہوا کہ اس کے پیٹ میں اس بار بھی بچی ہی نمو پا رہی ہے۔ اس پر ساس اور سسر نے سواتی کو مجبور کر دیا کہ وہ اسقاط حمل کروادے کیونکہ انہیں پوتا چاہیے تھا۔ اسقاط حمل کروانے پرسواتی کی حالت بگڑ گئی اور وہ موت کے منہ میں چلی گئی۔

رپورٹ کے مطابق سواتی کے صدمے سے دوچار 50سالہ والدسنیل یادو نے دلبرداشتہ ہو کراپنی بیٹی کی لاش شمشان گھاٹ لیجانے کی بجائے وہیں سسرالیوں کے دروازے کے سامنے اس کی چِتاجلا دی۔ سواتی کے بھائی امر یادو کا کہنا تھا کہ ”ہر شخص چاہتا ہے کہ اس کے مرنے والے عزیز کی چتا کو مناسب طریقے سے آگ لگائی جائے تاکہ اس کی روح کو سکون ملے ، لیکن ہم جانتے ہیں کہ سواتی کی روح کو اس وقت تک چین نہیں ملے گا جب تک اس کے سسرالی جیل نہیں پہنچتے۔ہم اس وقت تک چین سے نہیں بیٹھیں گے جب تک اپنی بہن کو انصاف نہیں دلوا لیتے۔ہمیں امید ہے کہ سواتی کی چِتا ان کے گھر کے سامنے جلائے جانے کے بعد یہ لوگ اس کے جلتے جسم کو تمام عمر نہیں بھول پائیں گے۔“

رپورٹ کے مطابق سواتی کے شوہر اور اس کا اسقاط حمل کرنے والے نیم حکیم باباصاحب کھیدراپوری کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔پولیس کو بابا صاحب کے کلینک سے 19سے زائد ناپختہ بچوں کی نعشیں ملی ہیں جو اس نے خواتین کے اسقاط حمل کرکے ان کے پیٹ سے نکالے تھے۔

#paksa

#paksa.co.za

Check Also

تیزی سے پیٹ کی چربی پگھلانے والی 4 ورزشیں

دنیا بھر میں جاری لاک ڈاؤن کے دوران اگر آپ کا بھی وزن بڑھ گیا …