Home » Interesting News » بھارتی حکومت اپنی فوج کے ساتھ بھی ہاتھ کرگئی، سنہرے خواب دکھا کر وقت آیا تو بھاگ گئی

بھارتی حکومت اپنی فوج کے ساتھ بھی ہاتھ کرگئی، سنہرے خواب دکھا کر وقت آیا تو بھاگ گئی

news-1433346060-9685_largeنئی دلی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت کی طرف سے 1999ءمیں ہلاک ہونے والے اپنے فوجی افسر کیپٹن سورابھ کالیا کی ہلاکت کا الزام پاکستان پر لگانا خود اس کے اپنے گلے پڑگیا ہے اور اب دو بڑی سیاسی پارٹیاں بی جے پی اور کانگرس اس معاملے سے جان چھڑانے کے لئے بھارتی عوام اور کیپٹن کالیا کہ والدین کو چکر دینے کی کوشش میں لگی ہوئی ہیں۔
1999ءکی کارگل جنگ کے دوران بھارت کی طرف سے الزام عائد کیا گیا تھا کہ کیپٹن کالیا کو پاکستانی سیکیورٹی ایجنسیوں نے زندہ گرفتار کرنے کے بعد تشدد کرکے ہلاک کردیا تھا۔ جب بھارتی حکومت کا یہ دعویٰ سامنے آیا تو کیپٹن کالیا کے والدین کی طرف سے یہ مطالبہ بھی سامنے آگیا کہ معاملے کو عالمی عدالت انصاف میں لیجایا جائے۔ جب عالمی عدالت انصاف کی بات ہوئی تو بھارت کے جھوٹ کا پول کھل گیا کیونکہ امور خارجہ کے وزیر مملکت اور سابقہ جنرل وجے کمار سنگھ نے راجیا سبھا کو بتایا کہ معاملہ اقوام متحدہ میں لے جانا بھارت کے حق میں نہیں کیونکہ اس صورت میں لائن آف کنٹرول پر کی جانے والی بھارتی خلاف ورزیوں اور مقبوضہ کشمیر میں عالمی قوانین کی خلاف ورزیوں کا معاملہ بھی عالمی عدالت انصاف کے پاس جانے کا جواز پیدا ہوجائے گا اور بھارت کے لئے بڑی مشکل کھڑی ہوجائے گی۔
کانگرس کی گزشتہ حکومت نے اپنی عوام کو چکر دینے کے لئے معاملے کو عدالت میں لے جانے کا اعلان کیا تھا لیکن بعد میں موقف بدل لیا۔ اسی طرح بی جے پی کی حکومت نے بھی سیاسی چال چلتے ہوئے معاملے کو عالمی عدالت انصاف کے سامنے رکھنے کا اظہار کیا لیکن اب اسے بھی سمجھایا گیا ہے کہ کسی غیرجانبدار بین الاقوامی ادارے سے فیصلہ کروانا بھارت کے حق میں نہیں، البتہ بھارتی حکومت کی طرف سے سیاسی مفاد پرستی کی خاطر اپنے ہی عوام کے ساتھ چالیں چلنے کا سلسلہ تا حال جاری ہے۔

news-1433346056-2459

Check Also

تیزی سے پیٹ کی چربی پگھلانے والی 4 ورزشیں

دنیا بھر میں جاری لاک ڈاؤن کے دوران اگر آپ کا بھی وزن بڑھ گیا …