Home » Interesting News » دنیا کا سب سے چھوٹے قد والا جوڑا، قد کتنا ہے؟ پہلی ملاقات کیسے ہوئی؟ ایسی تفصیلات بیان کردیں کہ انسان کیلئے یقین کرنا مشکل ہوجائے

دنیا کا سب سے چھوٹے قد والا جوڑا، قد کتنا ہے؟ پہلی ملاقات کیسے ہوئی؟ ایسی تفصیلات بیان کردیں کہ انسان کیلئے یقین کرنا مشکل ہوجائے

chota kad

برازیلیا(نیوزڈیسک) جب بات ہو محبت کی تو باقی ہر چیز بے معنی ہو کر رہ جاتی ہے، اور دنیا کے سب سے چھوٹے قد والے جوڑے نے یہ بات ثابت کر دکھائی ہے۔ برازیل سے تعلق رکھنے والے 30 سالہ پالو گیبریل اور 26 سالہ کاتوسیہ ہو شینو دونوں کا قد 3 فٹ سے کم ہے اور وہ دیکھنے میں ننھے منے بچوں جیسے نظر آتے ہیں۔ اخبار ڈیلی میل کے مطابق دونوں کا قد تقریباً 35انچ ہے اور دنیا بھر میں اس قدر چھوٹے قد کے میاں بیوی کی کوئی دوسری مثال موجود نہیں ہے۔
پالو کا کہنا ہے کہ دس سال قبل کاتوسیہ سے ان کی پہلی ملاقات انٹرنیٹ کے ذریعے ہوئی۔ دونوں نے MSN میسنجر کے ذریعے چیٹنگ کا آغاز کیا لیکن کاتوسیہ نے ابتداءمیں ہی انہیں رد کرتے ہوئے بلاک کر دیا۔ پالو کا کہنا ہے کہ انہیں کاتوسیہ بہت اچھی لگی تھیں لیکن وہ شروع میں انہیں متاثر نہ کر سکے اور کاتوسیہ نے ڈیڑھ سال تک انہیں بلاک رکھا۔ اس طویل عرصے کے دوران وہ کاتوسیہ کو بھولے نہیں بلکہ اس بات کے منتظر رہے کہ کبھی وہ انہیں ابن بلاک بھی کر دیں گی۔

پھر ایک دن ان کی قسمت نے جوش مارا اور ان کی خوشی کی انتہا نہ رہی کہ کاتوسیہ نے خود ہی انہیں ان بلاک کر دیا تھا۔ ایک بار پھر ان کے درمیان بات چیت شروع ہوئی اور کاتوسیہ کا کہنا تھا کہ اس بار وہ قدرے زیادہ شائستہ تھا۔ کچھ عرصے کی گفتگو کے دوران انہیں احساس ہوا کہ وہ ایک دوسرے کو پسند کرنے لگے ہیں اور پھر انہوں نے ملاقات کا فیصلہ کیا۔
کاتوسیہ کہتی ہیں کہ جب پالو پہلی دفعہ ان سے ملنے آئے تو مالٹے رنگ کی شرٹ اورجینز پہن رکھی تھی، اور بڑا سا چشمہ بھی پہن رکھا تھا۔ وہ کہتی ہیں کہ ان کے لباس سے انہیں سخت کوفت ہوئی لیکن شکر ہے کہ اب وہ بہتر ہو گئے ہیں۔ اس جوڑے کے تعلق کو اب 8 سال بیت چکے ہیں اور وہ کہتے ہیں کہ وہ دنیا کا خوش قسمت ترین جوڑا ہے کیونکہ ان کی پسند نا پسند ، زندگی بسر کرنے کا طریقہ اور مستقبل کے خواب ایک جیسے ہیں۔
چھوٹے قد والے اس جوڑے کا کہنا ہے کہ وہ ایک دوسرے سے بہت خوش ہیں لیکن دنیا ان کے ساتھ اچھا سکول نہیں کرتی۔ وہ اتنے چھوٹے ہیں کہ اے ٹی ایم مشین بھی استعمال نہیں کر سکتے اور شاپنگ سنٹر میں اپنی پسند کی چیزیں اٹھانے کیلئے بھی ان کا ہاتھ نہیں پہنچتا ،اور یہ منظر دیکھ کر لوگ ان پر ہنستے ہیں۔ کاتوسیہ کا کہنا تھا کہ وہ ان باتوں کے عادی ہو چکے ہیں اور انہیں ایک دوسرے سے ملنے والی مسرت اس قدر زیادہ ہے کہ انہیں کسی اور بات کی فکر ہی نہیں۔
کاتوسیہ کا مزید کہنا تھا کہ وہ بچوں کی خواہش بھی رکھتی ہیں لیکن ان کے جسمانی سائز کی وجہ سے ڈاکٹروں نے اسے ایک خطرناک عمل قرار دیا ہے ، تاہم وہ پر امید ہیں کہ کبھی وہ اس نعمت سے بھی مالا مال ہونگی۔ پالو اور کاتوسیہ کہتے ہیں کہ ان جیسے چھوٹے قد کے کسی اور جوڑے کی مثال موجود نہیں لہٰذا وہ اپنا نام گینز بک آف ورلڈ ریکارڈ ز میں بھی درج کروانا چاہتے ہیں۔

Check Also

تیزی سے پیٹ کی چربی پگھلانے والی 4 ورزشیں

دنیا بھر میں جاری لاک ڈاؤن کے دوران اگر آپ کا بھی وزن بڑھ گیا …