Home » Interesting News » دنیا کا وہ اسلامی ملک جہاں مسافر کا گاڑی میں بیٹھ کر سیٹ بیلٹ لگانا ڈرائیور کی توہین سمجھا جاتا ہے

دنیا کا وہ اسلامی ملک جہاں مسافر کا گاڑی میں بیٹھ کر سیٹ بیلٹ لگانا ڈرائیور کی توہین سمجھا جاتا ہے

seat

استنبول(مانیٹرنگ ڈیسک)دنیا بھر میں لوگ ٹیکسی یا اپنی ذاتی گاڑی میں سفر کے دوران تحفظ کے لیے سیٹ بیلٹ باندھتے ہیں مگر ترکی وہ واحد ملک ہے جہاں ٹیکسی ڈرائیور مسافروں کا سیٹ بیلٹ باندھنا اپنے لیے توہین سمجھتے ہیں۔یہی وجہ ہے کہ ترکی کی ٹیکسیوں میں مشکل ہی سے کوئی سیٹ بیلٹ درست حالت میں ملتا ہے اور یہ صورتحال استنبول میں بالخصوص عروج پر ہے۔ نیویارک ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق استنبول میں جب کوئی مسافر ٹیکسی میں بیٹھتا ہے تو اول تو اسے سیٹ بیلٹ درست حالت میں ملتا ہی نہیں، لیکن اگر سیٹ بیلٹ ٹھیک ہو تو وہ اسے باندھتے ہوئے دو بار سوچتا ہے کیونکہ اگر اس نے بیلٹ باندھ لیا تو ٹیکسی کا ڈرائیور طیش میں آ جائے گا۔

ترکی میں اگر کوئی مسافر ٹیکسی میں سیٹ بیلٹ باندھتا ہے تو ڈرائیورغصے میں آ جاتا ہے اور اسے طعنہ دیتا ہے کہ تم ”ترک“ ہی نہیں ہو ۔ گویاسیٹ بیلٹ باندھنا ترکوں کے لیے توہین کا باعث ہو ۔ پھر اس بیچارے مسافر کو اپنا ترک ہونا ثابت کرنا پڑتا ہے۔ترکی میں ٹیکسی ڈرائیور مسافروں کو کہتے ہیں کہ سیٹ بیلٹ محض ایک اضافی شے ہے جس کا گاڑی میں کوئی استعمال نہیں، کیونکہ یہ کار ہے کوئی ہیلی کاپٹر نہیں۔رپورٹ کے مطابق ترکی کے ڈرائیور اوورسپیڈنگ اور ٹریفک سگنل پر نہ رکنے اور بلاوجہ سڑک پر ایک لین سے دوسری میں جانے کے حوالے سے بھی دنیا بھر میں جانے جاتے ہیں۔ ترکی میں جو شخص ٹیکسی میں سیٹ بیلٹ باندھتا ہے ڈرائیوراس کے متعلق یقین کر لیتے ہیں کہ یہ بندہ ترک نہیں بلکہ بیرون ملک سے آیا ہے کیونکہ ترک باشندے کبھی ٹیکسی میں بیٹھ کر سیٹ بیلٹ نہیں باندھتے۔

Check Also

تیزی سے پیٹ کی چربی پگھلانے والی 4 ورزشیں

دنیا بھر میں جاری لاک ڈاؤن کے دوران اگر آپ کا بھی وزن بڑھ گیا …