Home » Interesting News » فرعون کی قبر سے اس کی لاش کے ساتھ پڑی ایک ایسی چیز مل گئی کہ اس کی حقیقت جان کر سائنسدان بھی دنگ رہ گئے، یہ اس دنیا کی نہیں بلکہ۔۔۔

فرعون کی قبر سے اس کی لاش کے ساتھ پڑی ایک ایسی چیز مل گئی کہ اس کی حقیقت جان کر سائنسدان بھی دنگ رہ گئے، یہ اس دنیا کی نہیں بلکہ۔۔۔

firon

قاہرہ(مانیٹرنگ ڈیسک) قدیم مصر کے حکمران فرعون طوطن خامن کی ممی کے گرد لپیٹے گئے کپڑے سے ایک خنجر برآمد ہوا تھا جس کے متعلق ماہرین ایک عرصے سے تحقیقات کر رہے تھے۔ طویل تحقیق کے بعد اب اس خنجر کی حیران کن حقیقت سے پردہ اٹھا دیا گیا ہے، جسے جان کر آپ بھی حیران رہ جائیں گے۔

کینیڈین براڈ کاسٹنگ کارپوریشن کی رپورٹ کے مطابق پولی ٹیکنک اٹلی کی یونیورسٹی آف میلن کے ماہرین نے انکشاف کیا ہے کہ یہ خنجر خلاءسے زمین پر گرنے والے شہاب ثاقب سے لیے گئے فولاد سے بنا ہوا ہے۔تحقیقاتی ٹیم کی سربراہ ڈینیئلا کومیلی (Daniela Comelli)کا کہنا تھا کہ ”خنجر کے بلیڈ میں 10فیصد نکل (Nickel)اور 0.6فیصد کوبالٹ استعمال ہوا ہے۔ ماہرین نے اس تحقیق میں ایکسرے فلوریسنس (X-ray Fluorescence)نامی تکنیک استعمال کی۔ ماہرین نے اس تکنیک کے ذریعے خنجر کاتجزیہ کرکے اس کا موازنہ 11اقسام کے دھاتی شہاب ثاقب سے کیا۔ خنجر ان کے بالکل مشابہہ تھا۔ رپورٹ کے مطابق طوطن خامن کی ممی 1922ءمیں دریافت ہوئی تھی جبکہ ممی کے گرد لپٹے کپڑوں سے یہ خنجر 1925ءمیں ماہر آثار قدیمہ ہوارڈ کارٹر نے دریافت کیا تھا۔خنجر ممی کی دائیں ران کے ساتھ بندھا ہوا تھا۔ اس خنجر کا دستہ اور دھاتی کور(Cover) سونے کے بنے ہوئے تھے اور ان پر دیدہ زیب نقش و نگار بنے ہوئے تھے۔ماہرین کے مطابق یہ خنجر 14ویں صدی قبل مسیح میں بنایا گیا تھا اور ان چند دھاتی چیزوں میں سے ایک ہے جن کا تعلق اس قدیم مصری تہذیب سے ہے۔

Check Also

تیزی سے پیٹ کی چربی پگھلانے والی 4 ورزشیں

دنیا بھر میں جاری لاک ڈاؤن کے دوران اگر آپ کا بھی وزن بڑھ گیا …