Home » Interesting News » ’ لوگ مجھے بھوت کہہ کر بُلاتے ہیں ‘ اس لیے سارا دن چھپ کر گزارتا ہوں، جب 12 سال کا تھا تو ماں یہ کہہ کر چھوڑ گئی کہ۔۔۔ ‘26 سالہ نوجوان کی ایسی حالت کیسے ہوئی؟اس کی کہانی جان کر آپ کی آنکھوں سے بھی آنسو نہ رُکیں

’ لوگ مجھے بھوت کہہ کر بُلاتے ہیں ‘ اس لیے سارا دن چھپ کر گزارتا ہوں، جب 12 سال کا تھا تو ماں یہ کہہ کر چھوڑ گئی کہ۔۔۔ ‘26 سالہ نوجوان کی ایسی حالت کیسے ہوئی؟اس کی کہانی جان کر آپ کی آنکھوں سے بھی آنسو نہ رُکیں

منیلا(مانیٹرنگ ڈیسک) فلپائن میں ایک شخص کو ایسا خطرناک، کمیاب جلدی مرض لاحق ہو گیا کہ نہ صرف اسے اس کی سگی ماں نے لاوارث چھوڑدیا بلکہ دیگر لوگوں نے بھی اسے انسان کی بجائے ’بدروح‘ قرار دے دیا اور اس کی جان کے دشمن بن گئے۔میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق 26سالہ انتونیو ریلوج نامی اس نوجوان کو بچپن ہی سے یہ بیماری لاحق تھی جس سے وقت کے ساتھ ساتھ اس کی جگہ موٹی اور خشک ہوتی گئی اور اس میں دراڑیں پڑتی گئیں۔ بالآخر وہ ایسے نظر آنے لگا جیسے اس کا پورا جسم جلا ہوا ہو۔

بارہ سال کی عمر میں اسے اس کی ماں نے لاوارث چھوڑ دیا جس کے بعد اس کی دادی نے اس کی پرورش کی۔ تب سے ہی لوگ اسے بھوت اور بدروح قرار دیتے آ رہے ہیں اور دیکھتے ہی اسے مارنے کو دوڑتے ہیں۔ کچھ روز قبل تک اس نے تمام عمر گھر میں محصور ہو کر گزاری ہے۔ اب کچھ فلاحی ورکرز نے اسے فلپائن کے دارالحکومت منیلا منتقل کر دیا ہے جہاں اس کا علاج کیا جائے گا۔

انتونیو کا کہنا ہے کہ ”میں الیکٹریشن بننا چاہتا تھا لیکن لوگوں کے خوف کی وجہ سے میں گھر میں قید ہو کر رہ گیا۔ مجھے گھر سے باہر جانااور مارکیٹ میں پھرنا اچھا لگتا تھا لیکن میں نے اپنی تمام عمر گھر میں ریڈیو سنتے ہوئے گزاری ہے۔ اب میں بہت خوش اور پرامید ہوں کہ میرا علاج ہونے جا رہا ہے۔ میں ابھی سے صحت مند ہونے اور نوکری حاصل کرنے کے خواب دیکھ رہا ہوں۔“

#paksa

#paksa.co.za

Check Also

تیزی سے پیٹ کی چربی پگھلانے والی 4 ورزشیں

دنیا بھر میں جاری لاک ڈاؤن کے دوران اگر آپ کا بھی وزن بڑھ گیا …