Home » Interesting News » مرد زیادہ آسانی سے رقم اُدھار دے دیتے ہیں یا خواتین؟ سائنسدانوں نے ایسا جواب دے دیا کہ سب اندازے غلط ثابت کردئیے

مرد زیادہ آسانی سے رقم اُدھار دے دیتے ہیں یا خواتین؟ سائنسدانوں نے ایسا جواب دے دیا کہ سب اندازے غلط ثابت کردئیے

udhar

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) اگر آپ کو رقم کی ضرورت ہے اور آپ کسی سے ادھار مانگنا چاہتے ہیں تو ہمارا مشورہ ہے کہ کسی مرد سے ہی رقم ادھار مانگیے گا، کیونکہ خواتین سے ادھار رقم مانگ کر ممکنہ طور پر آپ کو خفت ہی اٹھانی پڑے گی۔ ہمارا یہ مشورہ بے بنیاد نہیں بلکہ ماہرین نے اپنی ایک نئی تحقیق میں ثابت کیا ہے کہ خواتین کی نسبت مرد زیادہ آسانی سے رقم ادھار دے دیتے ہیں۔برطانوی اخبار دی مرر کی رپورٹ کے مطابق یہ تحقیق موبائل پیمنٹس سروس ”پیم“ (Paym) کے ماہرین نے کی ہے جس میں انہوں نے 600سے زائد مردوخواتین کی رقم ادھار دینے کی عادات کا تجزیہ کیا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ ”اگر شریک حیات، دوست، ساتھی ورکر یا کسی فیملی ممبر کو رقم کی ضرورت پڑ جائے تو مرد خواتین کی نسبت آسانی سے انہیں ادھار دے دیتے ہیں۔ ہماری تحقیق کے مطابق 63فیصد مرد بخوشی اپنے قریبی دوستوں کو رقم ادھار دے دیتے ہیں جبکہ خواتین میں یہ شرح 52فیصد ہے۔ 10فیصد خواتین اپنے شوہروں کو بھی رقم ادھار دیتے ہوئے ہچکچاتی ہیں۔ اس کے برعکس صرف 4فیصد شوہر اپنی بیویوں کو رقم دیتے ہوئے ہچکچاتے ہیں۔مرد اپنے ساتھی ورکرز کو بھی رقم ادھار دینے فیاضی کا مظاہرہ کرتے ہیں اور 21فیصد بخوشی اپنے کولیگز کو ادھار دے دیتے ہیں جبکہ صرف 11فیصد خواتین ہی اپنے کولیگز کو بخوشی رقم ادھار دیتی ہیں۔“ رپورٹ کے مطابق جب بات رشتہ داروں کی آتی ہے تو خواتین مردوں پر سبقت لے جاتی ہیں۔ اگر کوئی رشتہ دار مالی بدحالی کا شکار ہو تو 70فیصد خواتین انہیں رقم ادھار دیتے ہوئے خوشی محسوس کرتی ہیں جبکہ مردوں میں یہ تناسب 68فیصد ہے۔ ماہرین نے اس کی وجہ بیان کرتے ہوئے کہا ہے کہ ”خواتین رقم کی واپسی کا تقاضا کرتے ہوئے مردوں کی نسبت دو گنا پریشانی اور بے تابی کا مظاہرہ کرتی ہے۔ جب رقم کی واپسی کے تقاضے کا مرحلہ آتا ہے تو 16فیصد خواتین پریشان ہو جاتی ہیں۔ مردوں میں یہ شرح 8فیصد ہے۔ اس کے علاوہ 24فیصد خواتین رقم کی واپسی کا تقاضا کرتے ہوئے شرمندگی محسوس کرتے ہیں۔ دوسری طرف صرف 18فیصد مرد ہی رقم واپس مانگتے ہوئے شرمندہ ہوتے ہیں۔ انہی وجوہات کی بناءپر خواتین رقم ادھار دیتے ہوئے بھی ہچکچاتی ہیں۔

Check Also

تیزی سے پیٹ کی چربی پگھلانے والی 4 ورزشیں

دنیا بھر میں جاری لاک ڈاؤن کے دوران اگر آپ کا بھی وزن بڑھ گیا …