Home » Interesting News » ’میرے ساتھ جاسوسوں والا سلوک نہ کیا جائے ‘ پشاور کی جیل میں قید بھارتی شہری نے یہ درخواست عدالت سے کیوں کی اور وہ کس جرم میں گرفتار ہو ا تھا ؟

’میرے ساتھ جاسوسوں والا سلوک نہ کیا جائے ‘ پشاور کی جیل میں قید بھارتی شہری نے یہ درخواست عدالت سے کیوں کی اور وہ کس جرم میں گرفتار ہو ا تھا ؟

پشاور (پاکستان)پشاور کی جیل قیدبھارتی قیدی نے پشاور ہائی کورٹ سے اپیل دائر کی ہے کہ اس کے ساتھ ایک جاسوسوں جیساسلوک نہ کیا جائے کیونکہ وہ کسی قسم کی ریاست مخالف سرگرمیوں میں ملوث نہیں ۔ انڈین قیدی نے پٹیشن سینئر ایڈووکیٹ قاضی محمد انور کی وساطت سے پشاور ہائی کورٹ میں جمع کروائی۔ پٹیشن میں موقف اختیار کیا گیا کہ ملزم کسی قسم کی دہشت گردی کی کاروائیوں میں ملوث نہیں ہے لیکن اس کا جرم یہ ہے کہ وہ نامکمل دستاویزات پرغیر قانوی طریقے سے پاکستان میں داخل ہوا تھا۔
پشاور ہائی کورٹ کے دو رکنی بینچ چیف جسٹس یحییٰ آفریدی اور جسٹس اعجاز انور خان نے وزیردفاع اور وزیر داخلہ سمیت خیبر پختونخوا حکومت کو ہدایت کی کہ اس کیس کے حوالے سے اپنے جوابات جمع کروائیں۔پشاور کی جیل میں قید بھارتی شہری سوشل میڈیا ویب سائٹ پر دوست بننے والی پاکستانی لڑکی کے عشق میں گرفتار ہو کر اسے ملنے کیلئے پاکستان آیا تھا ۔ نہال انصاری کو 2012 میں کوہاٹ کے ایک ہوٹل سے سیکورٹی فورسز نے گرفتار کیا تھا۔ وہ افغانستان کے راستے سفارتی دستاویزات کے بغیر حمزہ نامی جعلی شناختی کارڈ کے ساتھ پاکستان میں داخل ہوا تھا۔
درخواست میں نہال انصاری نے یہ بھی قبول کیا ہے کہ اس نے درست دستاویزات کے بغیر پاکستان میں داخل ہونے کی غلطی کی ہے لیکن اپیل کی کہ طویل عرصہ قید کاٹنے کے بعد اس کی سزا میں کمی کر دی جائے۔ بھارتی شہری نے عدالت کو اپنے وارنٹوں پر “غیر قانونی سرگرمیوں” کے الفاظ کو تبدیل کرنے بھی کا مطالبہ کیاہے۔

 

#paksa

#paksa.co.za

Check Also

تیزی سے پیٹ کی چربی پگھلانے والی 4 ورزشیں

دنیا بھر میں جاری لاک ڈاؤن کے دوران اگر آپ کا بھی وزن بڑھ گیا …