Home » Interesting News » یہودی ربی نے پانچ سال سے زائد عمر کی بچیوں کے سائیکل چلانے پر پابندی لگادی

یہودی ربی نے پانچ سال سے زائد عمر کی بچیوں کے سائیکل چلانے پر پابندی لگادی

cycleمقبوضہ بیت المقدس (مانیٹرنگ ڈیسک) یہودیوں کے قدامت پسند آرتھوڈوکس رہنما نے پانچ سال یا اس سے زائد عمر کی بچیوں کے سائیکل چلانے کو مردوں کو اکسانے والا عمل قرار دیتے ہوئے اس پر پابندی لگادی ہے ۔
برطانوی اخبار انڈیپنڈنٹ کے مطابق یروشلم کے علاقے میں ایک یہودی ربی نے اپنے ماننے والوں میں اپنے اس فتویٰ کے حوالے سے پمفلٹ تقسیم کیے۔ یہودی ربی کا کہنا تھا کہ نوجوان لڑکیوں کا سائیکل پر بیٹھنا ان کی ناموس کو برباد کرسکتا ہے اور سائیکل کی نشست پر لڑکیوں کو اس حالت میں بیٹھنا پڑتا ہے جو مردوں کیلئے رغبت کا باعث ہے ۔یہودی ربی کی جانب سے لگائے گئے فتویٰ میں کہا گیا ہے ” ہم والدین کو مطلع کرتے ہیں کہ وہ اپنی پانچ سال یا اس سے زائد عمر کی بچیوں کو اس حرام کام سے منع کریں “۔
جن لوگوں کیلئے یہ فتویٰ دیا گیا ہے ان کا تعلق یہودی مذہب کے قدامت پرست ”آرتھوڈوکس ہرڈی“ فرقے سے ہے۔ گزشتہ سال دسمبر میں اسی فرقے کے مذہبی پیشواو¿ں نے اسرائیلی خواتین کو اعلیٰ تعلیم سے باز رہنے کا کہا تھا ۔ یہودیوں کے مذہبی پیشواو¿ں کا کہنا تھا کہ اعلیٰ تعلیم میںلادین نظریات پڑھائے جاتے ہیں جو یہودیت کیلئے عظیم خطرہ ہیں اس لیے یہودی خواتین کو اعلیٰ تعلیم سے دور رہنا چاہیے ۔ علاوہ ازیں یہودیوں کے انہی پیشواو¿ں نے اپنے حلقہ اثر کے علاقوں سے انٹرنیٹ کی سہولت بھی ختم کرارکھی ہے جبکہ انہوں نے سمارٹ فون کو بھی یہودی مذہب میں حرام قرار دے دیا ہے۔

Check Also

کیا سیب نظام ہاضمہ کیلئے مفید ہے؟ #paksa #paksa.co.za

آپ نے یہ جملہ تو ہر ایک سے سُنا ہوگا کہ روزانہ ایک سیب کھائیں …