Home » Interesting News » #paksa #paksa.co.za کامیاب ترین انسان بننے کے لئے انسان کو کتنا سونا چاہئے ؟دنیا کے کامیاب ترین بڑے لوگوں کے ایسے معمولات جن سے آپ بہت کچھ سیکھ سکتے ہیں

#paksa #paksa.co.za کامیاب ترین انسان بننے کے لئے انسان کو کتنا سونا چاہئے ؟دنیا کے کامیاب ترین بڑے لوگوں کے ایسے معمولات جن سے آپ بہت کچھ سیکھ سکتے ہیں

لاہور(ایس چودھری) دنیا کو اپنے قدموں پر جھکانے اور مال و دولت کے ساتھ ساتھ نام پیدا کرنے کا جذبہ رکھنے والے اکثر لوگ خواہشات کو عملی طور پر پورا کرنے میں ناکام ہوجاتے ہیں ،اسکی جہاں اور کئی وجوہات ہوسکتی ہیں وہاں بڑی وجہ ان لوگوں میں سونے کی عادات کا خراب ہونا بھی ہے ۔ وہ چوبیس گھنٹوں میں سے اکثر تیرہ سے چودہ گھنٹے نیند اور فضول مصروفیات میں گزار دیتے ہیں ۔کامیابی کے لئے   جس توانائی اور عمل کی ضرورت ہوتی ہے وہ اس سے قطعی آشنا نہیں ہوتے ۔ ایسے نوجوان اس بات کا گلہ کرتے ہیں کہ وہ قابلیت میں کسی سے کم نہیں ہوتے اسکے باوجود وہ اپنے ہم عصروں سے پیچھے رہ جاتے اور ناکامیوں پر اپنے مقدر کو کوستے رہتے ہیں ۔ دنیا کے کامیاب ترین لوگوں کا اس بارے میں کچھ اور کہنا ہے ۔خاص طور پر ان لوگوں کا نیند کے بارے میں فلسفہ ہے کہ نیند اس لئے ضروری ہے کہ یہ انہیں پھر سے میدان عمل میں بھیجنے کے لئے چند گھنٹوں کا ایک وقفہ دیتی ہے ۔ماہرین کے مطابق چار سے چھ گھنٹے کی نیند کافی ہوتی ہے بشرطیکہ ایسا انسان روزمرہ ایکسرسائز کا عادی ہو ،اسکے نیند کے اعصاب پرسکون رہتے ہیں جو اسے دن بھر ہشاش بشاش رکھتے ہیں۔

بزنس انسائڈر کی ایک رپورٹ کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ صرف چارگھنٹے سوتے ہیں ۔سابق امریکی صدر باراک اوبامہ رات ایک بجے سونے اور صبح چھ سات بجنے اٹھنے کے عادی ہیں ۔والٹ ڈزنی کے چئیرمن اور چیف ایگزیکٹو باب اگر کا کہنا ہے کہ وہ بہت کم سوتے ہیں اوررات چار بجے اٹھ کر ایکسرسائز کرتے اور پھر پرسکون ہوکر اپنے کام انجام دیتے  .دن کے وقت وہ ایک گھنٹہ قیلولہ بھی کرتے ہیں ۔

امریکہ کی مشہور بزنس لیڈی اور رائٹر ،ٹی وی پرسن مارتھا سٹیورٹ دن رات مصروف رہنے والی خاتون ہیں ۔ وہ صرف چار گھنٹے سوتی ہیں اور باقی ٹائم انتہائی سرگرمی سے گزارتی ہیں ۔امریکہ میں آن لائن سروسز مہیا کرنے والی کمپنی اے اوایل کے چیف ایگزیکٹو ٹم آرم سٹرانگ بھی چھ گھنٹے سونے کی خواہش رکھتے ہیں لیکن وہ چار گھنٹے ہی سو پاتے ہیں ۔ وہ صبح پانچ بجے اٹھ کر ایکسرسائز کرتے اور سات بجے تک اپنی ضروری ڈاک دیکھتے ہیں ۔ٹم آرمسٹرانگ کا کہنا ہے کہ وہ صبح سات بجے سے رات سات بجے تک لگاتار کام کرتے ہیں ۔

دنیا کی مشہور فیشن برانڈ Gucci کے چیف ایگزیکٹو ٹام فورڈ چوبیس گھنٹوں میں صرف تین سے چار گھنٹے سوتے ہیں ،ان کا کہنا ہے کہ کیرئر بنانے کے لئے توانائی کی ضرورت ہوتی ہے جو کام پر آمادہ رکھتی ہے ۔

Check Also

#paksa #paksa.co.za چینی انجینئر رائیونڈ سے پسند کی لڑکی بیاہ کر لے گیا

لاہور، رائیونڈ (ویب ڈیسک) چینی انجینئر رائے ونڈ سے پسندکی لڑکی بیاہ لے گیا ،شادی …